6 مئی 2016 کے بعد
خرم ابن شبیر نے Saturday، 7 January 2017 کو شائع کیا.

6 مئی 2016 کے بعد

بلاگ کے حوالے سے جب بھی مجھ سے کچھ پوچھتا ہے تو میں آنکھیں بند کرکے ایم بلال  بھائی کے حوالے کر دیتا ہوں۔ کیونکہ  یہی وہ ہستی ہے جس نے میری بلاگ کے حوالے سے بہت مدد کی بلکہ میرا بلاگ صرف اور صرف اسی ہستی کی وجہ سے ہی قائم  دائم ہے۔ مشکور ہونے کے بعد بہت سی غلطیاں  کوتاہیاں ہوئی  اقبالِ جرم کرتا ہوں۔ بعد اس تفصیل کے 6 مئی 2016 کے بعد حاصرِ خدمت ہوں۔ انتہا قسم کی مصروفیات اور کچھ مسائل کی وجہ سے ادھر کا رخ ہی کرنا نصیب نہیں ہوا۔ لکھنے لکھانے کا سلسلہ تقریباََ بند ہی ہو چکا تھا اور اپنی طرف سے بلاگ کو خدا حافظ بھی کہہ چکا تھا۔لیکن پھر وہی بات ایم بلال بھائی کی مہربانی سے بلاگ تو ابھی تک چل ہی رہا تھا لیکن اس پر کچھ نیا نہیں لکھا جا سکا تھا۔ کچھ حالات کی وجہ سے اور کچھ اپنی کوتاہی کی وجہ سے بلکل منظر سے غائب ہو جانے کے بعد کچھ کچھ فیس بک پر نظر آتا رہا ہوں۔ صورتِ حال یہ ہے کہ کچھ پیارے سٹوڈنٹ کی محبت اور چاہت کی وجہ سے پھر سے منظرِ عام پر آنے کا ارادہ کیا ہے اور اب یہ ارادہ کہاں تک ثابت قدم رہتا ہے اس کا اندازہ نہیں۔ اس وقت میں صرف اور صرف دو بڑے بڑے شکرئے ادا کرنے کے لیے حاضر ہوں اور اس کے بعد انشاءاللہ جیسا بھی لکھتا ہوں لکھنے کا سلسلہ پھر سے شروع کر رہا ہوں۔ پہلا شکریہ تو محترم ایم بلال ایم صاحب کا جن کی بدولت میں ابھی تک برقی افق  پر موجود ہوں اب انشاءاللہ چمکنا بھی شروع کر دوں گا۔ اور دوسرا شکریہ میرے ان سٹوڈنٹ بچوں کا ہے جنوں نے بہت محبت کے ساتھ میرے اس شوق کو پھر سے جلا بخشی ۔ فیس بک پر میرے حوالے سے ایک گروپ ” We Love Sir Khurram” بنا کر اس گروپ میں میری تصویریں، شاعری اور ویڈیو وغیرہ بھی شائع کی ہیں۔ اس پر میں اپنے تمام  سٹوڈنٹ کا بہت شکر گزار ہوں۔ اسامہ ستی، سجاد قاشقاری، حافظ اسرار، عاقب راجہ، حسین الرحمان، ہریرہ،  شاہین، ندا، نبا نور، اور ان کے علاوہ شعیب بھائی اور جن کے نام رہ گے ہیں ان سے معذرت کے ساتھ آپ سب کا بہت بہت شکریہ جس طرح آپ سب نے مجھے عزت بخشی ہے اللہ تعالیٰ آپ کو بھی عزت عطا فرمائے آمین


ٹیگز:-
تم اگر ایسے ہو جاؤ نا؟
خرم ابن شبیر نے Friday، 6 May 2016 کو شائع کیا.

ہر جگہ میں ہر طرح کے لوگ ہوتے ہیں۔ اچھے بھی بُرے بھی، صبر والے بھی، بے صبرے بھی، ہمیت والے بھی ، کم ہمیت والے بھی، غرز یہ کہ ہر جگہ میں ہر طرح کے لوگ موجود ہوتے ہیں۔ لیکن اس بات کی گرنٹی ہے کہ اس وقت دنیا میں کوئی بھی شخص ایسا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
لذت آموز
خرم ابن شبیر نے Friday، 22 April 2016 کو شائع کیا.

سبق آموز کا اب دور نہیں رہا۔ ہوتا تھا کسی زمانے میں ہمارے استاد ہمیں کہانیاں سنایا کرتے تھے، کتابوں میں بھی ایسی کہانیاں موجود ہوتی تھی جس سے ہمیں سبق ملتا تھا اور نیک کام کرنے اور نیکی کرنے کا شوق پیدا ہوتا تھا۔ اچھے دن تھے نا اتنی بے حیائی تھی اور نا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
میری کتاب کی تیاریاں
خرم ابن شبیر نے Friday، 8 April 2016 کو شائع کیا.

ایک بہت پرانی تحریر میری کتاب کی تیاریاں میں جب گھر میں داخل ہوا تو گھر میں رونق لگی ہوئی تھی شاہد میری ہی کوئی بات چل رہی تھی۔ کیونکہ میرے اندر آتے ہی یاسر نے کہا “لو جی شاعر صاحب آ گے ہیں” یاسر میرا کزن ہے بہت ہی ہنس مکھ ہے اور اس […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
پرفیوم، باڈی سپرے کی فروخت جاری ہے
خرم ابن شبیر نے Monday، 11 January 2016 کو شائع کیا.

بہت عرصہ یہاں سے غائب رہنے کی بہت ساری وجوہات ہیں۔ جن میں سے ایک وجہ انتہائی مصروفیت تھی۔ باقی وجوہات یہاں بیان کرنا ممکن نہیں۔ باقی تفصیل کو چھوڑ کر سیدھا اصل بات کی طرف آتا ہوں۔ اللہ کے کرم سے اور اپنوں کی مہربانی سے ایک نئے کاروبار کا آغاز کیا ہے۔ اور […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
خود اعتمادی، ہمت اور یقین
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 22 September 2015 کو شائع کیا.
سپاہی ہو تو کیسا ہو
خرم ابن شبیر نے Saturday، 29 August 2015 کو شائع کیا.
بلاگرز ہوشیار
خرم ابن شبیر نے Sunday، 24 May 2015 کو شائع کیا.
پاکستان میں کرکٹ الحمداللہ
خرم ابن شبیر نے Saturday، 23 May 2015 کو شائع کیا.
دولت کا عشق
خرم ابن شبیر نے Friday، 15 May 2015 کو شائع کیا.
مجھے لگتا ہے کہ میں اپنے راستے سے ہٹ گیا ہوں
خرم ابن شبیر نے Friday، 1 May 2015 کو شائع کیا.
بابا اب آپ کو نہیں لگے گئی
خرم ابن شبیر نے Monday، 6 April 2015 کو شائع کیا.
نورِ سحر کا آج سکول میں پہلا دن
خرم ابن شبیر نے Monday، 6 April 2015 کو شائع کیا.
ہم ایسے ہی بے وقوف رہنا چاہتے ہیں
خرم ابن شبیر نے Wednesday، 25 March 2015 کو شائع کیا.
اور ہم ہمسایوں کے حقوق کی بات کرتے ہیں
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 24 February 2015 کو شائع کیا.
اللہ تعالیٰ نے مجھے ایک اور چاند سی بیٹی عطا کی ہے
خرم ابن شبیر نے Thursday، 1 January 2015 کو شائع کیا.
خصوصی دعا ہمارے لیے
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 30 December 2014 کو شائع کیا.
سانحہ پیشاور اور ڈھوک حسو کی عوام
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 23 December 2014 کو شائع کیا.
دُکھ
خرم ابن شبیر نے Saturday، 20 December 2014 کو شائع کیا.
سیلاب کے مسائل اور موجودہ حالات پر بابا اشفاق کی یہ باتیں پوری اترتی ہیں
خرم ابن شبیر نے Friday، 12 September 2014 کو شائع کیا.
free counters