محفوظات برائے ”محمد وارث صاحب“ زمرہ

فیض احمد فیض آئے کچھ ابر، کچھ شراب آئے اس کے بعد آئے جو عذاب آئے بامِ مینا سے ماہتاب اترے دستِ ساقی میں آفتاب آئے کر رہا تھا غمِ جہاں کا حساب آج تم یاد بے حساب آئے فیض تھی راہ سر بسر منزل ہم جہاں پہنچے کامیاب آئے ولہ شیخ صاحب سے رسم […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-

ابراہیم ذوق وقتِ پیری شباب کی باتیں ایسی ہیں جیسی خواب کی باتیں پھر مجھے لے چلا ادھر دیکھو دلِ خانہ خراب کی باتیں تجھ کو رسوا کرئینگی خوب اے دل تیری یہ اضطراب کی باتیں ولہ خوب روکا شکایتوں سے مجھے تُو نے مارا عنایتوں سے مجھے واجب القتل اس نے ٹھرایا آیتوں سے […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-

حصۂ دوم – بحرِ خفیف مسدس مخبون محذوف مقطوع میں کہی گئی کچھ مشہور غزلیات اس مضمون کا عنوان “ایک خوبصورت بحر” میرے ذہن میں اس بحر میں کہی گئی مشہور غزلیات کو دیکھ کر آیا تھا۔ اور دوسری بات یہ تھی کہ اس بحر میں کہی گئی غزلیات ہمارے گلوکاروں میں بھی مقبول رہی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
ایک خوبصورت بحر ۔ بحرِ خفیف (محمد وارث) 1
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 17 May 2011 کو شائع کیا.

ایک خوبصورت بحر ۔ بحرِ خفیف (محمد وارث) فہرست حصۂ اول – بحرِ خفیف مسدس مخبون محذوف مقطوع – تعارف اور اوزان حصۂ دوم – بحرِ خفیف مسدس مخبون محذوف مقطوع میں کہی گئی کچھ مشہور غزلیات کتابیات حصۂ اول ۔ بحرِ خفیف مسدس مخبون محذوف مقطوع – تعارف اور اوزان بڑی بحر ایک دریا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
رباعی کے اوزان پر ایک بحث از محمد وارث ۔2
خرم ابن شبیر نے Monday، 16 May 2011 کو شائع کیا.

اسی مضمون کے حوالے سے فیس بُک پر ایک دوست نے کچھ استفسارات کیے تھے، میں نے انکے جواب لکھ دیے تھے یہاں بھی دوستوں کے ساتھ شیئر کر رہا ہوں: استفسار: یہ جو ہم بچپن سے سنتے آئے ہیں کہ “لا حول ولا قوت الا باللہ ” رباعی کا وزن ہے ۔۔ تو کیا […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
رباعی کے اوزان پر ایک بحث از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Sunday، 15 May 2011 کو شائع کیا.

رباعی کے اوزان پر ایک بحث از محمد وارث رباعی بھی خاصے کی چیز ہے، قدما اس کے چوبیس وزن بنا گئے سو عام شعرا کو اس سے متنفر کرنے کیلیے یہی کافی ہے کہ رباعی کے چوبیس وزن ہیں، حالانکہ اگر تھوڑا سا تدبر و تفکر کیا جائے اور ان اوزان کو ایک خاص […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
مفاعلاتن کی حقیقت۔ از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Thursday، 4 March 2010 کو شائع کیا.

اردو محفل پر م م مغل صاحب کے ایک سوال کے جواب پر محمد وارث صاحب یہ جواب دیا تھا  امید ہے اس سے بہت سارے دوستوں کو رکن مفاعلاتن کے بارے میں پتہ چل سکے گا مفاعلاتن، اول تو کوئی رکن ہے ہی نہیں سو اس سے کوئی بحر بھی نہیں بنتی۔ اراکین یہ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
آزاد نظم ایک مختصر تعارف از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Thursday، 25 February 2010 کو شائع کیا.

اردو محفل پر ایک جگہ ایم اے راجا بھائی نے آزاد نظم کے حوالے سے ایک سوال کیا تھا سوال کچھ یوں ہیں۔ “کیا آزاد نظم کسی بھی بحر میں لکھی جاسکتی ہے؟ کیا ایک مصرع میں ایک ارکان اور دوسرے میں کئی ارکان بھی باندھ سکتے ہیں؟ کیا ہر مصرع الگ بحر و وزن […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
نہ سرا ملا ہے کوئی، نہ سراغ زندگی کا۔ از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Sunday، 7 February 2010 کو شائع کیا.

نہ سرا ملا ہے کوئی، نہ سراغ زندگی کا یہ ہے میری کوئی ہستی، کہ ہے داغ زندگی کا یہی وصل کی حقیقت، یہی ہجر کی حقیقت کوئی موت کی ہے پروا، نہ دماغ زندگی کا یہ بھی خوب ہے تماشا، یہ بہار یہ خزاں کا یہی موت کا ٹھکانہ، یہی باغ زندگی کا یہ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
تازہ ہوا کا جھونکا بنایا گیا مجھے۔ از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Sunday، 7 February 2010 کو شائع کیا.

تازہ ہوا کا جھونکا بنایا گیا مجھے دنیائے بے نمو میں پھرایا گیا مجھے میں آنکھ سے گرا تو زمیں کے صدف میں تھا بہرِ جمالِ عرش اُٹھایا گیا مجھے سازش میں کون کون تھا، مجھ کو نہیں ہے علم مُصحَف میں اک ہی نام بتایا گیا مجھے بخشی گئی بہشت مجھے کس حساب میں؟ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
دنیا کا پہلا فلسفی – تھےلیز آف مائیلیٹس. از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 5 January 2010 کو شائع کیا.

دنیا کا پہلا فلسفی – تھےلیز آف مائیلیٹس (Thales of Miletus) بھری گرمیوں کا دن تھا، دو متحارب بادشاہوں کی فوجیں آپس میں برسرِ پیکار تھیں، اس دن سینکڑوں لاشیں گر چکیں تھیں۔ یہ دونوں فوجیں پچھلے پندرہ سالوں سے آپس میں خون کی ندیاں بہا رہی تھیں کبھی جنگ رک جاتی تھی اور کبھی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
تازہ ہوا کا جھونکا بنایا گیا مجھے۔ از محمد وارث
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 5 January 2010 کو شائع کیا.

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
‘صریرِ خامۂ وارث’ ایک مکمل ادبی بلاگ
خرم ابن شبیر نے Tuesday، 8 December 2009 کو شائع کیا.

http://muhammad-waris.blogspot.com/ مجھے جب کبھی کسی غزل میں مشکل ہوتی ہے جب تقطع درست نہیں ہوتی یا پھر کوئی بحر سمجھ نہیں آتی تو میں فوراََ ‘صریرِ خامۂ وارث’  کی طرف رجوع کرتا ہوں۔ مجھے امید ہوتی ہے کہ ادبی لحاظ سے میری تقرباََ ہر مشکل کا حل صریرِ خامۂ وارث’  میں موجود ہوگا اس لیے […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
محمد وارث صاحب
خرم ابن شبیر نے Monday، 7 December 2009 کو شائع کیا.

 خاکسار کی تعلیم کاروبار کے متعلق ہے اور پیشہ “پرائی بیگار” یعنی پرائیوٹ نوکری لیکن عشق شعر و شاعری و علم و ادب و تحریر و تصنیف و مطالعہ و موسیقی سے ہے، اور ‘اسد’ تخلص رکھ، ‘شہیدوں’ میں نام بھی لکھوا رکھا ہے، اس لیے زندگی بٹی ہوئی ہے لیکن میں شکرگزار ہوں اپنی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
ستاروں سے آگے جہاں اور بھی ہیں
خرم ابن شبیر نے Monday، 2 November 2009 کو شائع کیا.

ایم اے راجا بھائی نے محفل پر علامہ اقبال صاحب کا ایک شعر  کی تقطیع کی درخواست کی تھی کچھ اس طرح۔ ایم اے راجا براہِ کرم اقبال کے اس شعر کی تقطیع کر دیں اور بحر کے بارے میں بتا دیں۔ ستاروں سے آگے جہاں اور بھی ہیں ابھی عشق کے امتحاں اور بھی […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
یہ تفاعیل کیا چیز ہے۔
خرم ابن شبیر نے Monday، 2 November 2009 کو شائع کیا.

محفل پر ایک دفعہ الف نظامی صاحب نے وارث صاحب سے سوال کیا تھاکہ سوال۔         محمد وارث صاحب ایک اور سوال یہ تفاعیل کیا چیز ہے۔ اس پر وارث صاحب نے بہت خوبصورت انداز سے جواب دیا تھا آپ کی خدمت میں بھی پیش کر رہا ہوں امید ہے بہت ساروں کو اس سے فائدہ […]

مکمل تحریر پڑھیے »


ٹیگز:-
free counters